ماسک نہیں پہننا تو قبر کھودیں۔۔

0
16

انڈونیشیا میں فیس ماسک پہننے سے انکار کرنے والے افراد کو سزا کے طور پر کووڈ 19 کے باعث انتقال کرجانے والے لوگوں کی قبریں کھودنے کی سزا سنادی گئی۔

انڈونیشیا کے صوبے مشرقی جاوا میں کورونا وائرس کے کیسز کی تعداد میں اضافے کے بعد فیس ماسک پہننے سے انکار کرنے والے افراد کے خلاف کارروائی کی جارہی ہے۔

نیوز ویک کی رپورٹ کے مطابق مشرقی جاوا کے ضلع Cerme میں فیس ماسک پہننے سے انکار کرنے والے افراد کو قبریں کھودنے کی سزا سنائی گئی۔

مقامی حکام کو توقع ہے کہ اس طرح کی سزا سے ہر اس فرد کے اندر خوف پیدا ہوگا جو لازمی فیس ماسک کے استعمال کے قانون کی خلاف ورزی کرتا ہے۔

ضلعی سربراہ سویونو فیس ماسک کے استعمال کو یقینی بنانے کے لیے پرعزم ہیں اور ان کا کہنا تھا کہ ‘اس وقت ضلع میں صرف 3 گورکن موجود ہیں تو میرے خیال میں اس طریقے سے لوگ ان کا بوجھ کم کرسکیں گے’۔

سزا پانے والے افراد 2، دو کی ٹیم بناکر ایک قبر پر کام کریں گے، یعنی جب ایک قبر کھود رہا ہوگا تو دوسرا اندر سے کشادہ کررہا ہوگا۔

سویونو نے مزید کہا کہ ‘توقع ہے کہ اس سے قوانین کی خلاف ورزی کے خلاف ڈر پیدا ہوگا’۔
مقامی پولیس کے سربراہ نے بھی واضح کیا کہ اہلکار فوج کے ساتھ مل کر کام کریں گے اور عوامی اجتماعات میں قوانین کی خلاف ورزیوں کی روک تھام کریں گے۔

پولیس کے مطابق ہم عوام پر فیس ماسک پہننے کے لیے زور دیتے ہیں تاکہ کووڈ 19 کی روک تھام کی جاسکے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here