مرغ کے بانگ دینے پر 33 ہزار روپے جرمانہ

0
497

اٹلی میں 83 سالہ بزرگ شخص پر مرغے کی بانگوں کی وجہ سے جرمانہ عائد ہوگیا۔

فاکس نیوز کی رپورٹ کے مطابق اٹلی کے ٹاؤن کاسٹیراگا ویڈراڈو میں 83 سالہ شخص کو علی الصبح مرغے کی مسلسل بانگوں کی وجہ سے جرمانے کا سامنا ہے۔

اٹلی کے مقامی اخبار آئی ایلسیٹاڈنو کے مطابق طویل عرصے اس علاقے میں رہائش پذیر اینگیلو بولیٹی کو جرمانے کی مد میں 166 یورو ادا کرنے ہوں گے جو اندازاً 195 ڈالر اور 33 ہزار پاکستانی روپے کے برابر ہے۔

انجیلو بولیٹی نے مقامی خبررساں ادارے کو انٹرویو میں کہا کہ میرے پاس اپنے احساسات بیان کرنے کے لیے الفاظ نہیں کہ اس کی کیا ضرورت تھی۔

انہوں نے بتایا کہ کارلینو نامی مرغا ان کے باغ رہتا تھا جو ان کی ملکیت تھا اور اس علاقے میں گزشتہ 10 برس سے تھا۔

تاہم انجیلو بولیٹی نے آخر کار اپنے پڑوسیوں کی شکایات کے بعد مرٖغے کو اپنے ایک دوست کے حوالے کردیا تھا۔

بعدازاں انہوں نے کارلینو کو عارضی طور پر اپنے دوست سے اس وقت واپس لیا تھا جب ان کا دوست 20 روز کی چھٹیوں پر گیا تھا۔

لیکن پڑوسیوں کی جانب سے مرغے کی واپسی سے متعلق شکایت کے بعد پولیس افسر نے انجیلو بولیٹی کے گھر پر چھاپا مارا تھا۔

دراصل کارلینو نامی مرغے کی صبح ساڑھے 4 بجے کے قریب سنی گئی تھیں۔

مرغے کے مالک پر مقامی قانون کی بنیاد پر تقریباً 200 ڈالر کا جرمانہ عائد کیا گیا، جس کے مطابق پالتو جانوروں کو پڑوسیوں کے مکانات سے کم از کم 32.8 فٹ دور ہونا چاہیے۔

انجیلو بولیٹی جو پیشے کے لحاظ سے معمار ہیں تاہم اب وہ ریٹائر پوچکے ہیں، انہوں نے بتایا کہ وہ اس قانون سے لاعلم تھے اور وہ جرمانے کے خلاف اپیل دائر کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here