حسن عسکری نے نگراں وزیر اعلیٰ پنجاب کے عہدے کا حلف اٹھا لیا۔

0
823

گورنر ہاؤس پنجاب میں حلف برداری کی تقریب منعقد ہوئی، جس میں گورنر پنجاب رفیق رجوانا نے پروفیسر حسن عسکری سے ان کے عہدے کا حلف لیا۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز الیکشن کمیشن آف پاکستان (ای سی پی) نے متفقہ طور پر پروفیسر حسن عسکری کو پنجاب کا نگراں وزیر اعلیٰ مقرر کیا تھا۔

ایڈیشنل سیکریٹری اختر نذیر نے بتایا تھا کہ پروفیسر حسن عسکری کا شمار پاکستان کی نامور علمی شخصیات میں ہوتا ہے اور وہ ملکی اور غیر ملکی درسگاہوں میں شعبہ علم و تدریس سے منسلک ہیں، اس کے علاوہ وہ مختلف اخبارات، جرائد اور ٹی وی چینلز پر اہم موضوعات پر ایک مایہ ناز مبصر تصور کیے جاتے ہیں۔

تاہم مسلم لیگ (ن) اور پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) نے پروفیسر حسن عسکری کی بطور نگراں وزیراعلیٰ پنجاب تقرری کے فیصلے کو مسترد کیا تھا۔

مسلم لیگ (ن) کے رہنماسابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن نے پنجاب میں انتخابات کو مشکوک بنادیا، ایسا لگ رہا ہے کہ انتخابات شفاف نہیں ہوں گے۔

شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ پنجاب میں نگراں سیٹ اپ غیر جانبدار ہونا اور نظر آنا چاہیے، نو منتخب نگراں وزیراعلیٰ حسن عسکری اپنے کالموں میں انتخابات ملتوی ہونے کا ذکر کرچکے ہیں، ان کے ٹوئٹس اور آرٹیکلز میں مسلم لیگ (ن) کے خلاف تعصب ظاہر ہوتا ہے۔

اس کے علاوہ پیپلز پارٹی لاہور ڈویژن کے صدر عزیز الرحمٰن چن نے الزام عائد کیا تھا کہ پنجاب میں نگراں وزیراعلیٰ کی تقرری کے پورے عمل میں پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) اور مسلم لیگ (ن) نے پی پی پی سے مشاورت نہیں کی۔

تاہم الیکشن کمیشن نے مسلم لیگ (ن) کے اعتراض کو مسترد کردیا تھا اور کہا تھا کہ آئین کے آرٹیکل 224 کے تحت الیکشن کمیشن کو 4 نام بھیجے گئے تھے اور آئین اور قانون کے تحت متفقہ طور پر پروفیسر حسن عسکری کا نام نگراں وزیراعلی کے طور پر منظور کیا گیا۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here